@deeda_dahi

Zalaam

Ask @deeda_dahi

Sort by:

LatestTop

👀

دل کو حصار رنج و الم سے نکال بھی
کب سے بکھر رہا ہوں مجھے اب سنبھال بھی

آہٹ سی اس حسین کی ہر سو تھی، وہ نا تھا
ہم کو خوشی کے ساتھ رہا ایک ملال بھی
سب اپنی اپنی موج فنا سے ہیں بے خبر
میرا کمال شاعری، تیرا جمال بھی

حسن ازل کی جیسے نہیں دوسری مثال
ویسا ہی بے نظیر ہے اس کا خیال بھی
مت پوچھ کیسے مرحلے آنکھوں کو پیش تھے
تھا چودھویں کا چاند بھی، وہ خوش جمال بھی
جانے وہ دن تھے کونسے اور کونسا تھا وقت
گڈ مڈ سے اب تو ہونے لگے ماہ و سال بھی
ایک چشم التفات کی پیہم تلاش میں
ہم بھی الجھتے جاتے ہیں، لمحوں کا جال بھی
دنیا کے غم بھی اپنے لئے کم نا تھے کہ اور
دل نے لگا لیا ہے یہ تازہ وبال بھی
ایک سرسری نگاہ تھی، ایک بے نیاز چپ
میں بھی تھا اس کے سامنے، میرا سوال بھی
آتے دنوں کی آنکھ سے دیکھیں تو یہ کھلے
سب کچھ فنا کا رزق ہے ماضی بھی حال بھی
تم دیکھتے تو ایک تماشے سے کم نا تھا
آشفتگان دشت محبت کا حال بھی
اس کی نگاہ لطف نہیں ہے، تو کچھ نہیں
امجد یہ سب کمال بھی، صاحب کمال بھی
۔امجد اسلام امجد ۔

View more

Related users

How much exposed you are to expressions now?

Musshafii’s Profile Photoمصحفی
میں ہوں اپنے کمرے میں جیسے اجنبی تنہا
آپ بھی چلے آتے اس طرف کبھی تنہا
ہر طرف حوادث کی موجزن ہوائیں ہیں
کس کس سے ٹکرائے ایک آدمی تنہا
جا کے بس کوئی اتنا اہرمن سے کہہ دیتا
وقت کا مداوا ہے آج روشنی تنہا
دیکھنے میں دنیا ہے اک ہجوم دل داراں
سوچئے تو ہوتی ہے ہر کی زندگی تنہا
ہر طرف سسکنے کی آ رہی تھیں آوازیں
رو رہی تھی صحرا میں رات چاندنی تنہا

شہر شہر مسکن ہے ظلمتوں کا اب یارو
گاؤں گاؤں رقصاں ہے آج تیرگی تنہا
آپ نے نہ پہچانا ہاں وہی تو پاشاؔ تھا
وہ خموش گم صم سا ایک آدمی تنہا
۔۔پاشا رحمان۔۔

+ 1 💬 message

read all

Next

Language: English