Ask @eeshaaman:

‎تری یادوں کا میلا رہ گیا ہے ‎وہی دل کا جھمیلا رہ گیا ہے ‎پلٹ کر جا چکی ہیں ساری لہریں ‎سمندر بھی اکیلا رہ گیا ہے ‎وہ محنت کش نہ جانے اب کہاں ہے ‎سڑک پر خالی ٹھیلا رہ گیا ہے ‎یہی حسرت ہے تیرے ساتھ مل کر ‎کبھی جو کھیل کھیلا رہ گیا ہے ‎جسے قسمت نے چاہا سرخرو ہے ‎جسے غم نے دھکیلا رہ گیا ہے

Ch Zia Ur Rehman
Wahhh Wahh

View more

Next